پریس ریلیز|

اسلام آباد : مورخہ 8 مئی 2020

کورونا عالمی وباءکی نوعیت، اس سے نمٹنے کی حکمت عملی اورعالمی سوچ رکھنے والے مختلف فریقین کا اس ضمن میں نکتہ نظر جاننے کی ضرورت کے پیش نظر وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے ’ایف ایم کنیکٹ ڈیجیٹل: دی تھاٹ لیڈرز سیریز‘ متعارف کرادی ہے۔

ایف ایم کنیکٹ ڈیجیٹل:تھاٹ لیڈر پلیٹ فارم کے ذریعے وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی دنیا بھر میں مختلف دانشوروں، مصنفین، ماہرین تعلیم اورمحقیقین سے ڈیجیٹل تبادلہ خیال کریں گے۔

’ایف ایم کنیکٹ ڈیجیٹل سیشن کے افتتاحی اجلاس کے موقع پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے عالمی سوچ رکھنے والے 4 قائدین کو مدعو کیا ہے۔ اجلاس میں کورونا وبا کے بعد کے منظرنامے پر سوچ وبچار ہوگی اور اس کے عالمی، علاقائی، سیاسی، سماجی اور معاشی اثرات ومضمرات پر غور وخوض کیاجائے گا۔

ان تھاٹ لیڈرز میں درج ذیل شخصیات شامل ہیں؛

ان تھاٹ لیڈرز میں ہارورڈ یونیورسٹی کے مذاکرات کے موضوع پر پروگرام کے شریک بانی اور اس شعبے میں دنیا میں مانے ہوئے ماہر ڈاکٹر ولیم اُرے شامل ہیں۔ وہ اس وقت ہارورڈ مذاکراتی منصوبے کے سینئر فیلو اور نامور لکھاری کے طورپر دنیا بھر میں معروف ہیں۔

سنگاپور کے سفارتکار، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے سابق صدر اور ماہرتعلیم پروفیسر کشور محبوبانی کو مدعو کیاگیا ہے جو سنگا پور نیشنل یونیورسٹی کے ایشین ریسرچ انسٹی ٹیوٹ (اے۔آر۔آئی) کے ممتاز فیلو ہیں۔

بوسٹن یونیورسٹی کے فریڈریک ایس پارڈی سکول برائے عالمی مطالعہ کے پروفیسر ڈاکٹر کیوین پی گلاگھر بھی ’ایف ایم کنیکٹ ڈیجیٹل:ٹھاٹ لیڈرز کے اس اجلاس میں شریک ہوں گے۔ ڈاکٹر کیوین گلوبل ڈویلپمنٹ پالیسی سینٹر کے سربراہ ہیں۔

بوسٹن یونیورسٹی کے فریڈریک ایس پارڈی سکول برائے عالمی مطالعہ کے ڈین ڈاکٹر عادل نجم بھی مہمانوں میں شامل ہیں۔

’ایف ایم کنیکٹ وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کے پبلک ڈپلومیسی اقدام کا حصہ ہے
٭٭٭٭

203/2020
Close Search Window