پریس ریلیز|

(پریس ریلیز)
522/2020
پاکستان اور ڈنمارک کے درمیان دوطرفہ سیاسی مشاورت کی دوسری نشست 
 
اسلام آباد: مورخہ 25 نومبر2020
 
پاکستان اور ڈنمارک کے درمیان دوطرفہ سیاسی مشاورت کی دوسری نشست ورچوئل طریقے سے آج منعقد ہوئی۔ پاکستان کی طرف سے سپیشل سیکریٹری (یورپ) ڈاکٹرامان راشد نے جبکہ ڈنمارک کی طرف سے ان کی وزارت خارجہ کی انڈر سیکریٹری برائے خارجہ امور محترمہ کرسٹینا مارکس لیسن نے قیادت کی۔ اطراف نے سیاسی معاشی، تجارتی، سرمایہ کاری، قابل تجدید توانائی، گرین ٹیکنالوجی اور تعلیم سمیت دوطرفہ تعلقات کے وسیع امور پر تبادلہ خیال کیا۔ 
 
سپیشل سیکریٹری نے ڈنمارک کے نمائندوں کو ان اقدامات کے بارے میں آگاہ کیا جو حکومت پاکستان کورونا وبا کی دوسری لہر سے عوام کی جان اور روزگار بچانے کے لئے کررہی ہے۔ پاکستان نے کورونا وبا کو موثر انداز سے نمٹنے پر ڈنمارک کو سراہا۔ اطراف نے کورونا وبا کے نتیجے میں پیدا ہونے والی سماجی ومعاشی مشکلات اور اثرات پر تبادلہ خیال کیا۔ سپیشل سیکریٹری نے وزیراعظم عمران خان کے ترقی پزیر ممالک کے لئے ”قرض میں ریلیف کے عالمی اقدام“ کی حمایت کرنے پر ڈنمارک کا شکریہ ادا کیا۔ 
 
اطراف نے دوطرفہ تجارت اور سرمایہ کاری سے متعلق تعلقات پر بات چیت کی اور ’گرین پارٹنرشپ‘ قائم کرکے گرین ٹیکنالوجی میں تعاون کے نئے امکانات تلاش کرنے پر اتفاق کیا۔ یورپی یونین کے تناظر میں پاکستان نے یورپی یونین کے ساتھ پاکستان کے ’جی۔ایس۔پی پلَس‘ سٹیٹس کی تجدید میں حمایت پر ڈنمارک کا شکریہ ادا کیا۔ 
 
پاکستان نے غیرقانونی قانونی طورپر بھارت کے زیرقبضہ جموں وکشمیر میں قابض بھارتی افواج کے غیرانسانی فوجی محاصرے کے تسلسل، فوجی کارروائیوں اور ماورائے عدالت شہادتوں میں اضافے کے علاوہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں اور چوتھے جینیوا کنونشن سمیت عالمی قانون کی کھلم کھلا خلاف ورزی کرتے ہوئے مقبوضہ متنازعہ خطے میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنے کے لئے نئے ڈومیسائل قوانین کے اجراءکے بھارتی اقدامات پر شدید تشویش کا اظہار کیا۔
 
اطراف نے حالیہ پیش ہائے رفت کے تناظر میں افغانستان کی صورتحال پر بھی غوروخوض کیا۔ سپیشل سیکریٹری نے ڈنمارک کے نمائندوں کو وزیراعظم عمران خان کے دورہ کابل کے بارے میں آگاہ کیا۔ انہوں نے اعادہ کیا کہ مشترکہ عالمی ذمہ داری کے طورپر پاکستان افغانوں کی قیادت میں افغانوں کو قبول امن عمل کی حمایت جاری رکھے گا تاکہ افغانستان پائیدار امن اور سلامتی سے ہمکنار ہو۔ ڈنمارک کی جانب سے افغان عمل امن میں پاکستان کے تعمیری کردار کو سراہا گیا۔ 
 
سپیشل سیکریٹری نے اسلاموفوبیا میں اضافے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے زور دیا کہ اظہار رائے کے حق کو ذمہ داری کے ساتھ استعمال ہونا چاہئے اور مذہب یا مذہبی ہستیوں کو سیاسی مقاصد کے لئے استعمال نہیں کرنا چاہئے جس سے دیگر طبقات کی دل آزاری ہو۔ 
 
اطراف نے اقوام متحدہ سمیت عالمی اداروں میں تعاون کی سطح پر اطمنان کا اظہار کرتے ہوئے ایک دوسرے کی حمایت جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔ 
 
اطراف نے باہمی مفاد کے تمام امور پر رابطے میں رہنے پر اتفاق کیا۔ دوطرفہ مشاورت کا آئندہ دور باہمی طورپر متفق تاریخ پر منعقد ہوگا۔ 
٭٭٭٭٭
522/2020
Close Search Window